اعتزاز احسن کی شریف خاندان سے معذرت

اعتزاز احسن، شریف خاندان،

پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنماء اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ وہ نواز شریف کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز کی وفات پر افسردہ ہیں اور ان کے اہل خانہ کو ماضی میں ان کے الفاظ سے جو تکلیف پہنچی، اس پر معذرت خواہ ہیں۔

“مجھے اظہار تاسف کی پیشکش کی گئی تھی لیکن میں نے ایسا نہیں کیا جس پر افسوس ہے۔”

انہوں نے کہا کہ بیگم کلثوم نواز کا انتقال شریف خاندان کا بہت بڑا نقصان ہے، جمہوریت کے لیے ان کی گراں قدر خدمات تھیں۔

رہنماء پی پی پی نے کہا کہ سابق صدر جنرل (ر) پرویز مشرف کے دور میں بیگم کلثوم نواز جوانمردی سے ڈٹی رہیں۔

خیال رہے کہ رواں سال جون میں اعتزاز احسن کا ایک متنازع بیان سامنے آیا تھا جس میں انہوں نے شریف خاندان پر الزامات عائد کرتے ہوئے کہا تھا کہ زبان زد عام ہے کہ ہارلے اسٹریٹ کلینک جہاں کلثوم نواز زیرعلاج تھیں، شریف خاندان کی ملکیت ہے۔

loading...

اعتزاز احسن نے الزام عائد کیا تھا کہ ہارلے اسٹریٹ کوئی اسپتال نہیں کلینک ہے لیکن وہاں دل کے بائی پاس ہوتے ہیں۔ انہوں نے سابق وزیراعظم نواز شریف کے اپنے اہلیہ کے ساتھ رہنے کو تاخیری حربہ قرار دیا تھا۔

یہی بیان صدر مملکت کے لیے اپوزیشن کے متفقہ امیدوار کی حیثیت سے اعتزاز احسن کے نام پر ن لیگ کے اعتراض کی بنیادی وجہ سمجھا جاتا ہے۔ معاملہ حل کرنے کے لیے ن لیگ اور پی پی پی رہنماؤں کی کئی بیٹھکیں ہوئیں تاہم پی پی پی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے اعتزاز احسن کا نام واپس لینے سے انکار کر دیا تھا۔

مزید پڑھیں۔  فیس بک کے بانی مارک زکر برگ نے یورپ سے بھی معافی مانگ لی

بعدازاں پی پی پی نے اعتزاز احسن جبکہ دیگر اپوزیشن جماعتوں بشمول ن لیگ نے مولانا فضل الرحمان کو اپنا صدارتی امیدوار نامزد کیا تھا۔

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں