کیمیائی حملے، شامی الیگزینڈر لاورینتیف ایران جا پہنچے

کیمیائی حملوں
loading...

شام میں کیمیائی حملہ، روس کے خصوصی مندوب کا غیراعلانیہ دورہ ایران ,روسی سفیر دوما میں کیمیائی حملوں کے بعد پیدا صورت حال پر ایرانی حکام سے بات چیت کریں گے

ماسکو:روس کے خصوصی مندوب برائے شام الیگزینڈر لاورینتیف ایران کے غیر اعلانیہ دورے پر تہران پہنچ گئے ہیں۔ایران کے سرکاری میڈیا کے مطابق وہ شامی علاقے دوما میں مبینہ کیمیائی حملوں کے بعد پیدا شدہ صورت حال کے بارے میں ایرانی حکام کے ساتھ تبادلہ خیال کریں گے۔ روس اور ایران شامی صدر بشار الاسد کے حامی ہیں۔ دونوں ممالک کو اسد حکومت کی حمایت کے باعث امریکا اور مغربی ممالک کے دباؤ کا سامنا ہے۔

دوسری جانب عالمی ادارہ صحت نے آج بتایا ہے کہ دوما میں کم از کم 500ایسے افراد کو ہسپتال لایا گیا تھا، جن کی بظاہر علامات سے لگتا ہے کہ وہ زہریلے کیمیائی مادوں سے متاثر ہوئے تھے۔ دنیا میں بیماریاں بہت تیزی سے  افراد کو اپنا شکار بنا رہی ہیں۔   دوما  میں کیمیائی مادوں کی وجہ سے  500 افراد ہسپتال  میں لائے گئے تھے ۔ اسکی وجہ دوما میں کیمیائی  حملے بنے ہیں۔    شامی صدر بشار الا سد   حکومت کی حمایت درپیش ہے۔   واضح رہے الیگزینڈر لاورینتیف ایران کے غیر اعلانیہ دورے پر  جا پہنچے ہیں  اور وہاں  گفتگو  بھی کریں گے۔

Comments

comments

مزید پڑھیں۔  معروف پروڈیوسر سعدیہ جبار پرڈوکشنزکے تحت ایک اور سحر انگیز ڈرامہ "گھمنڈ"کی تیاریاں جاری

اپنا تبصرہ بھیجیں