ایشیاء کپ: آج افغانستان اور بنگلہ دیش مدِمقابل ہوں گے

ایشیاء کپ
Loading...

ایشیاء کپ کے چھٹے میچ میں آج دونوں ٹیمیں ابوظہبی کے شیخ زاید کرکٹ اسٹیڈیم میں پاکستانی وقت کے مطابق شام 4 بجے آمنے سامنے ہوں گی
گروپ “بی” میں شامل دونوں ٹیمیں سری لنکا کو شکست دینے کے بعد پہلے ہی سُپر فور مرحلے میں داخل ہو چکی ہیں.
دلچسپ بات یہ ہے کہ جو بھی ٹیم جیتے گی وہ ابوظبی میں ہی اپنا اگلا میچ کھیلے گی جبکہ شکست خوردہ سائیڈ کو نہ صرف دبئی میں کھیلنا ہوگا جہاں پر زیادہ گرمی میں اس کا مقابلہ گروپ اے کی ٹاپ ٹیم سے ہوگا۔ اس لیے دونوں ہی دبئی میں کھیلنے سے بچنے کی خواہاں ہیں۔
بنگلہ دیش کو فٹنس مسائل بھی درپیش ہیں، شکیب الحسن انگلی اور مشفیق الرحیم پسلی کی تکلیف میں مبتلا ہیں۔ انھیں آرام دیا جاسکتا ہے۔
اسی طرح خود کپتان مشرفی مرتضیٰ بھی اپنی متاثرہ کمر کو آرام دینے کے لیے مسلسل دو میچز کھیلنے سے گریز کرسکتے ہیں۔ اس صورت میں ابوحیدر، نظم الاسلام اور عارف الحق کو میدان میں اترنے کا موقع مل سکتا ہے۔
دوسری جانب افغانستان کا انحصار بدستور اپنے اسپنرز راشد خان، مجیب الرحمان اورمحمد نبی پر ہوگا۔ رواں برس جون میں کھیلی جانے والی تین ٹوئنٹی 20 میچز کی سیریز میں بنگلہ دیش کو راشد خان کے خلاف شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا تھا۔
اگر افغانستان نے روٹیشن پالیسی اختیار کی تو محمد شہزاد اور فاسٹ بولرز آفتاب عالم اور گلبدین نائب کو آرام دے سکتا جبکہ ان کے متبادل کیلیے منیر احمد کاکڑ، سمیع اللہ شنواری، سید شیرزاد اور وفادار کے آپشنز موجود ہیں۔ افغانستان اور سری لنکا کے درمیان ابوظبی میں کھیلے گئے میچ میں اوس کی موجودگی کا احساس نہیں ہوا تھا۔
مشرفی مرتضیٰ کو ون ڈے کرکٹ میں 250 شکار کھیلنے والے پہلے بنگلہ دیشی کا اعزاز حاصل کرنے کیلیے مزید 4 شکار درکار ہیں، وہ مجموعی طور پر اس سنگ میل پر پہنچنے والے دنیا کے 17 ویں فاسٹ بولر ہوں گے۔ اب تک باہمی طور پر کھیلے جانے والے 5 ایک روزہ میچز میں سے 3 میں بنگال ٹائیگرز افغان سائیڈ کو زیر کرچکے ہیں۔ رحمت شاہ میدان میں اتر کر ایک روزہ میچز کی ففٹی مکمل کرنے والے چھٹے افغانی بن جائیں گے۔

Loading...
(Visited 12 times, 1 visits today)
Loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں