پاکستان کا ورلڈ بینک سے پاک، بھارت آبی تنازع حل کرنے کا مطالبہ

ورلڈ بینک

پاکستان اور بھارت کے مابین پانی کے تنازع کو سازگار ماحول میں حل کرنے کے لیے اقدامات شروع کر دیئے گئے ہیں ٗترجمان ورلڈ بینک

واشنگٹن: پاکستان نے ورلڈ بینک سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ پانی پر پاک بھارت تنازع کے حل کے لیے اگلے ماہ مذاکراتی عمل کے آغاز میں اپنا کردار ادا کرے۔ ورلڈ بینک کے ترجمان نے نجی ٹی وی کو بتایا کہ پاکستان اور بھارت کے مابین پانی کے تنازع کو سازگار ماحول میں حل کرنے کے لیے اقدامات شروع کر دیئے گئے ہیں۔رواں ہفتے عالمی بینک کی جانب سے این سولومون کی سربراہی میں وفد جائزہ لینے کیلئے بھارت روانہ ہو چکا ہے تاہم گزشتہ ہفتے وزیراعظم کے مشیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے ورلڈ بینک کے منیجنگ ڈائریکٹرسے واشنگٹن میں ملاقات کرکے تنازع کے حل پر زور دیا۔مذکورہ ملاقات کے بعد، پاکستان نے ورلڈ بینک سے واشنگٹن میں باقاعدہ اجلاس طلب کرنے کا مطالبہ کیا ہے تاکہ بھارت کے متنازع ڈیم سے متعلق اسلام آباد اپنا موقف پیش کر سکے۔خیال رہے کہ ورلڈ بینک نے این سولومون کو دسمبر 2016 میں مقرر کیا جو پانی پر پاک بھارت تنازع کے حل کے لیے بات چیت کا سلسلہ بڑھائیں گے اور اس ضمن میں وہ جلد ہی اسلام آباد کا دورہ بھی کریں گے ٗورلڈ بینک دسمبر 2016 کے بعد سے پانی کے مسئلے پر دو مرتبہ پاک بھارت مذاکرات نشستیں منعقد کراچکا ہے تاہم عالمی بینک بھارت کو متنازع ڈیم کی تعمیر سے روکنے میں ناکام رہا ہے۔دوسری جانب اسلام آباد کو شدید تنقید کا سامنا ہے کہ وہ قانونی لڑائی کے دوران عالمی مملک سے سفارتی سطح پر بھارت پر دباؤ ڈال کر آبی جارحیت سے روکنے میں ناکام رہا ہے۔ذرائع نے بتایا کہ حکومت نے مذکورہ معاملہ دسمبر 2015 میں عالمی فورم پر اٹھانے کا فیصلہ کیا تاہم چند نا معلوم وجوہات کی بناء پر تاخیر برتی گئی۔

مزید پڑھیں۔  کامن ویلتھ گیمز، ہاکی ایونٹ میں پاکستان اور روایتی حریف بھارت کے درمیان میچ 7 اپریل کو کھیلا جائے گا

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں