جس طرح سینیٹ انتخابات ہوئے ،جمہوریت اس کی متحمل نہیں ہوسکتی ، شاہد خاقان عباسی

شاہد خاقان عباسی

حکومت نے پہلے دن سے ہی آزادی صحافت کا فیصلہ کیا، صحافی بتائیں ہم نے ذمے داری پوری کی یا نہیں، طے کیا تھا صحافیوں کیلئے کوئی سیکریٹ فنڈ نہیں ہوگا ،تنقید ضرور کریں

اسلام آباد :وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہاہے کہ جس طرح بلوچستان کی حکومت آئی اور سینیٹ انتخابات ہوئے جمہوریت اس کی متحمل نہیں ہوسکتی حکومت نے پہلے دن سے ہی آزادی صحافت کا فیصلہ کیا، صحافی بتائیں ہم نے ذمے داری پوری کی یا نہیں، طے کیا تھا صحافیوں کیلئے کوئی سیکریٹ فنڈ نہیں ہوگا ٗتنقید ضرور کریں ٗ اچھے کام بھی سامنے لائیں۔

ہتک عزت کے دعوے سے کسی کی صرف پگڑی اچھالی جا سکتی ہے، میڈیا جھوٹی خبر کی خود تردید شائع کرے ٗبڑی مشکلات آئیں ۔حکومت نے ترقی کا سفر جاری رکھا، 2013 کے پاکستان کو بہت بہتر حالت میں چھوڑ کر جا رہے ہیں۔ جدید دنیا میں سنسر شپ نہیں چل سکتی۔

loading...

شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ جب سے ہماری حکومت قائم ہوئی تو ہم نے پہلے دن یہ فیصلہ کیا تھاکہ صحافت اور رپورٹنگ میں کسی قسم کی مداخلت نہیں ہو گی ۔ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہاکہ حکومت نے پہلے دن سے ہی آزادی صحافت کا فیصلہ کیا، صحافی بتائیں ہم نے ذمے داری پوری کی یا نہیں، طے کیا تھا کہ صحافیوں کے لیے کوئی سیکریٹ فنڈ نہیں ہوگا۔

شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ تنقید ضرور کریں لیکن اچھے کام بھی سامنے لائیں، حقائق پر مبنی رپورٹنگ ملک کے لیے بہت اہم ہے، کوشش رہی کہ صحافت پر کسی قسم کا دباؤ نہ ڈالیں، آزادی اظہار رائے کو یقینی بنانے کے لیے اقدامات کیے۔

مزید پڑھیں۔  فلم ’شور شرابا‘ 29جون کو ملک بھر میں ریلیز کی جائیگی

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں