پاکستان نریندرمودی کے طیارے کو اپنی فضائی حدود سے گزرنے دے، بھارتی حکومت کی درخواست

نریندرمودی

اسلام آباد : بھارتی حکومت نے اپنے وزیر اعظم نریندر مودی کاطیارہ پاکستان کی فضائی حدود سے گزرنے کے  لیے باضابطہ اجازت طلب کرلی۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی حکومت کی جانب سے حکومتِ پاکستان سے کی گئی درخواست میں کہا گیا ہے کہ بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کا خصوصی طیارہ 20ستمبر کو پاکستانی فضائی حدود سے گزر کر امریکا جائے گا۔

سفارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ مذکورہ بالا خصوصی طیارے کے لیے پاکستان سے باضابطہ درخواست کی گئی ہے کہ پاکستان اپنی فضائی حدود استعمال کرنے کی اجازت دے۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ بھارتی وزیراعظم اقوام متحدہ کے اجلاس میں شرکت کریں گے، درخواست باضابطہ طور پر گزشتہ ہفتے دی گئی تھی ۔

افغان امن عمل مذاکرات پر طالبان کی صدر ٹرمپ کو پیشکش

ذرائع کا کہنا ہے کہ حکومت بھارتی وزیر اعظم کے طیارے کو اجازت دینے یہ نہ دینے سے متعلق اعلیٰ سطح مشاورتی اجلاس بلانے پرغور کررہی ہے، کچھ دن قبل بھارتی صدرکےطیارے کو فضائی حدود کے استعمال کی اجازت نہیں دی گئی تھی۔ بھارتی صدر نے آئس لینڈ جانے کے لیے پاکستانی فضائی حدود استعمال کرنے کی اجازت مانگی تھی۔

یاد رہے اس سے قبل بھارت نے مودی کے طیارے کیلئےفضائی حدودکی اجازت مانگی تھی، یہ درخواست شنگھائی تعاون تنظیم سربراہ اجلاس میں بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کی شرکت کے تناظر میں کی گئی تھی۔

پاکستان نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کو پاکستان کی فضائی حدود استعمال کرنے کی اجازت دے دی تھی تاہم بھارت نے ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے راستہ تبدیل کردیا تھا۔

(Visited 52 times, 1 visits today)

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں