ایئرکنڈیشن میں آرام کرنے والے خبردار ہوجائیں….!

Loading...

موسم سرما کے آتے ہی لوگ سخت گرمی سے بچنے کے لیے اپنے گھروں میں ایئرکنڈیشن کا استعمال زیادہ کر دیتے ہیں.

وہ یہ نہیں جانتے کہ ان حالات میں ایئرکنڈیشن کا استعمال ان کے لیے کتنا نقصان دہ ہے؟ ایئرکنڈیشن کرونا وائرس کے تیزی سے پھیلاؤ کی وجہ بن سکتا ہے.

امریکن یونیورسٹی کے ماہرین کی رپورٹ میں ان کا کہنا ہے ک ہم نے یہ مشاہدہ کیا ہے کہ جہاں ایئرکنڈیشن کا استعمال زیادہ کیا جارہا ہے وہاں کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد میں اضافہ سامنے آیا ہے.

Loading...

امریکی یونیورسٹی کے پروفیسر نوڈل کا کہنا ہے کہ عام طور پر یہ کہا جاتا ہے کہ کرونا وائرس کھانسنے اور چھینکنے کے دوران نکلنے والے ذرات سے پھیلتا ہے. اس کے علاوہ یہ ثبوت بھی ملتے ہیں کہ کرونا وائرس ہوا کے ذریعے بے انسان کے جسم میں داخل ہوتا ہے.

کرونا وائرس کو شکست دینے والے یہ ضرور پڑھ لیں …..!

ماہرین کا کہنا ہے کہ جو کہ ایسی چلانے کے لئے کمرے کو بند کر دیا جاتا ہے تاکہ باہر کیا ہوا اندر داخل ہو سکے اور اندر کی ٹھنڈک باہر نہ جا سکے اسی لیے آسانی سے پھیل جاتا ہے کیونکہ یہ کمرے کے اندر اے سی کی ہوا میں شامل ہو جاتا ہے اور جب کوئی شخص اچانک باہر سے کمرے میں داخل ہوتا ہے تو وہ بہت آسانی سے اس وائرس کا شکار ہو سکتا ہے

ماہرین نے لوگوں کو خبردار کیا ہے کہ وبا کے دنوں میں ائیر کنڈیشن کا استعمال کم کریں اگر آپ ائیر کنڈیشن چلاتے ہیں تو اس کی صفائی کا خاص خیال رکھیں تاکہ آپ وائرس سے محفوظ رہ سکیں.

(Visited 201 times, 1 visits today)
loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں