کرونا کی دوسری لہر کے متعلق آئی ایم ایف نے بڑی پیشگوئی کر دی

کرونا کی دوسری لہر
Loading...

واشنگٹن : کرونا وائرس کے خلاف دنیا بھر میں بڑے پیمانے پر وسائل استعمال کرنے کی وجہ سے کرونا وائرس کی دوسری لہر اتنی خطرناک ثابت نہیں ہوگی،

تاہم کرونا کی تباہی کے خطرات اپنی جگہ موجود ہیں، آئی ایم ایف کے سربراہ کرسٹالینا جیویا نے کہا کہ صورتحال کم خطرناک ہے ان کا کہنا تھا کہ 2020 کی صورتحال وہ اگلے ہفتے پیش کریں گی۔

عالمی ادارہ صحت نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ دنیا بھر میں کرونا وائرس سے متاثر ہونیوالوں کی اصل تعداد موجودہ تعداد سے بیس گنا زیادہ ہو سکتی ہے،

loading...

پاکستان میں کرونا سے مزید 12 مریض جاں بحق

ایک انتہائی محتاط اندازے کے مطابق دنیا میں تقریباً کرونا کی دوسری لہر سے ہر دس میں سے ایک شخص کرونا وائرس کے انفیکشن کا شکار ہوسکتا ہے،

دنیا میں اب تک ساڑھے تین کروڑ سے زیادہ افراد کے متاثر ہونے کی تصدیق ہو چکی ہے، شہری اور دیہی علاقوں میں متاثرہ افراد کی تعداد میں واضح فرق پایا جا رہا ہے.

(Visited 36 times, 1 visits today)
Loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں