پاکستان چیف جسٹس کے فیصلے کے بعد بدلنے جا رہا ہے، شیخ رشید

Loading...

وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید کا کہنا ہے کہ ریلوے کا تمام ڈھانچہ نیا بننے جا رہا ہے، ایم ایل ون ہی بعد میں بلٹ ٹرین ٹریک بن جائے گا، ڈیڑھ لاکھ افراد اس پر کام کریں گے، ایم ایل ون کی تعمیرمیں 90 فیصد لیبر پاکستان کی ہوگی، 10 فیصد انجینیئرز چین سے آئیں گے۔

وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ جنرل باجوہ اورعمران خان نےچین میں ایم ایل ون کے لیے محنت کی، اس ماہ ایکنک سے ایم ایل ون پاس ہو جائے گا، ایم ایل ون کے بغیر ریلوے حادثات ختم نہیں ہو سکتے۔

انہوں نے کہا کہ ایم ایل ون پر کوئی ریلوے کراسنگ نہیں ہوگی، 7 گھنٹے میں کراچی سے لاہور پہنچ جائیں گے، اس سال ایم ایل ون پر کام شروع ہو جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ الیکشن سے پہلے جھاڑو پھر جائے گی ،اس اپوزیشن میں کوئی دم نہیں ،عمران خان پانچ سال پورے کریں گے، 120 دن میں 120 عدالتیں سب گند ختم کردیں گی، شہباز شریف ان کی پارٹی کے آدمی ہیں جو وہ بولیں گے وہ وہی کریں گے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ ریلوے انقلاب کی طرف جا رہی ہے، 9 ارب ڈالرز کا یہ ٹھیکہ ہے، ایم ایل ون سے بہتر پٹڑی کو نکال کر برانچ لائنز پر لگا دیں گے۔

شیخ رشید نے کہا کہ عمران خان پانچ سال پورے کرے گا ،اپوزیشن میں ٹاک شو کرنے کے علاوہ کوئی سکت نہیں، الیکشن سے پہلے جھاڑو پھر جائے گا، آپ کےآدھےٹی وی پروگرام ختم ہو جائیں گے۔

Loading...

انہوں نے کہا کہ پاکستان چیف جسٹس کے فیصلے کے بعد بدلنے جا رہا ہے، اعلیٰ عدلیہ جو کہتی ہے ٹھیک ہے، اعلیٰ عدلیہ ہی جو کرے گی وہ ٹھیک ہے۔

وزیر ریلوے نے کہا کہ چیف جسٹس نے فرمایا شیخ رشید ایک لاکھ نوکریاں کہاں سے دے گا، ایم ایل ون کے مزدور کی تنخواہ کا ریلوے پر بوجھ نہیں، یہ چین اور ٹھیکے لینے والے دیں گے۔

شیخ رشید نے کہا کہ میں نے کہا تھا جولائی اہم مہینہ ہے قومی احتساب بیورو (نیب) کو ٹارزن کے اختیارات ملیں گے، 120 دن میں سارا گیم ختم ہو جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ کورونا کے دوران میرے لیے ٹیکوں اورپلازمہ کا بندوبست کرنے پر این ڈی ایم اے کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔

(Visited 43 times, 1 visits today)
loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں