سال 2020 کے غیر معمولی واقعات تصاویر میں

کیا آپ کو یاد ہے کہ ایک وقت تھا جب دنیا میں ہر کوئی پُرامید لگتا تھا۔ سنہ 2019 کے اختتام اور سنہ 2020 کے آغاز پر لوگ سمجھ رہے تھے کہ مستقبل میں ان کی زندگیاں بہتری کی طرف جا سکتی ہیں۔
لیکن سب کچھ توقعات کے برعکس رہا۔ کورونا وائرس کی عالمی وبا نے پوری دنیا کو ہلا دیا اور ہر کسی کے لیے پریشانی بڑھتی رہی۔
لیکن اب ہمیں سنہ 2020 کو اتنا بھی بُرا نہیں سمجھنا چاہیے۔ یہ خوبصورتی، ہنسی مذاق اور انسانی لچک کا بھی سال تھا۔ ان تصاویر کے ذریعے ہم ہر مہینے کا جائزہ لے سکتے ہیں۔

جنوری

GETTY IMAGES

چین میں ایک خطرناک وائرس پھیلا اور اس کے بارے میں کسی کو کچھ معلوم نہیں تھا۔ بہتر حفاظتی سامان کی عدم موجودگی میں لوگ روزمرہ استعمال ہونے والی چیزوں کو متبادل کے طور پر استعمال کرنے لگے۔

فروری

GETTY IMAGES

دنیا بھر میں سپر مون نظر آیا جس میں چاند غیر معمولی طور پر پہلے سے کافی بڑا دِکھ رہا تھا۔
یہ رواں سال فلکیات کے عجیب واقعات میں سے ایک تھا۔ اس تصویر میں ترکی کا ایک گاؤں ایڈرن دیکھا جا سکتا ہے۔ اس میں سُپر مون نے 16ویں صدی کی ایک مسجد کو اپنی روشنی سے چمکا دیا ہے۔

مارچ

GETTY IMAGES

کورونا وائرس کے پھیلاؤ کی وجہ سے عائد ہونے والی پابندیوں نے دنیا کو اپنی لپیٹ میں لے لیا۔ ہم میں سے کئی افراد 2020 کے دوران آن لائن چلے گئے، چاہے بات کام، شاپنگ یا دوستوں سے ملنے کی ہو۔
اس تصویر میں ہانگ کانگ کی ایک ٹیچر کو اپنی آن لائن کلاس کے لیے ریکارڈنگ کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔

اپریل

SHUTTERSTOCK

سماجی فاصلے کے لیے کیے جانے والے اقدامات نے لوگوں کی تخلیقی صلاحیتوں کو بڑھا دیا۔
امریکہ میں ایک رومن کیتھولک پادری پانی والی پستول کے ذریعے اپنے اجتماع پر مقدس پانی چھڑک سکتے ہیں۔

مئی

GETTY IMAGES

افریقی نژاد امریکی شخص جارج فلوئیڈ پولیس کی حراست میں تھے جب ان کی ہلاکت ہوئی۔ اس سے نسلی امتیاز اور پولیس کے تشدد کے خلاف ایک عالمی تحریک کا آغاز ہوا۔
امریکہ میں کیلیفورنیا اور سیکرامنٹو میں ہونے والے مظاہرے تو بس ایک شروعات تھی جس نے پورے ملک کو متحرک کردیا۔

جون

REUTERS

پوری دنیا میں کئی ملکوں میں جب لاک ڈاؤن لگے تو ہمارا خیال تھا کہ زندگی شاید کبھی اپنی اصل حالت میں بحال نہیں ہو گی۔
لیکن بارسلونا میں ایک فنکار نے نرسری کے دو ہزار سے زیادہ پودوں کے سامنے پرفارم کیا۔ وہ ان مشکل وقتوں میں فن کی اہمیت کو اُجاگر کر رہے تھے۔

جولائی

REUTERS

کینیا میں ایک خاتون پریشانی سے ٹڈی دل کو اپنی زمین پر قبضہ جماتے دیکھ رہی ہیں۔ پاکستان، ایران اور انڈیا میں فصلیں تباہ کرنے کے بعد یہ ٹڈیاں مشرقی افریقہ پہنچی تھیں۔

اگست

GETTY IMAGES

دنیا کی تاریخ میں سب سے طاقتور غیر جوہری دھماکوں میں سے ایک لبنان کے دارالحکومت بیروت میں پیش آیا جس میں 200 سے زیادہ لوگ ہلاک اور ہزاروں زخمی ہوئے۔
پیانسٹ ریمنڈ عیسیان بھی اس دھماکے سے متاثر ہوئے۔ دھماکے سے انھیں ذہنی دھچکا لگا اور وہ بے گھر ہو گئے تھے۔

ستمبر

REUTERS

برازیل کے بارانی جنگل (رین فارسٹ) ایمازون میں دہائی کی سب سے بڑی آگ لگی تھی۔ اس پر ماحولیات کے ماہرین اور کارکنان نے کافی تشویش ظاہر کی تھی۔
یہ جیگوار اس آگ سے تو بچ نکلا تھا لیکن اس کے پنجے جل گئے تھے۔

اکتوبر

GETTY IMAGES

دنیا بھر میں کئی حکومتوں اس بارے میں غور کر رہی تھیں کہ آیا لاک ڈاؤن لگا کر کورونا وائرس کا پھیلاؤ روکا جا سکتا ہے۔ کئی صنعتوں سے وابستہ افراد اپنے کاروبار سے متعلق فکر مند تھے۔
اٹلی کے دارالحکومت روم میں ایک ریستوران کے مالک نے اپنی کرسی پر ایک مصنوعی انسانی ڈھانچہ بٹھا رکھا تھا جو اس بات کی علامت تھا کہ ان کا کاروبار مر رہا ہے۔

نومبر

REUTERS

تھائی لینڈ کے متری چتنوندا شاہی خاندان کے بڑی حامی ہوا کرتے تھے۔ لیکن رواں سال جمہوری اصلاحات کے لیے مظاہروں اور بادشاہت کی جانب سے عائد نئی پابندیوں نے انھیں متاثر کیا اور انھوں نے بھی شاہی خاندان کی مخالفت شروع کردی۔
ان کے بالوں پر اب فلم ہنگر گیمز سے متاثرہ ایک تصویر بنی ہے جس میں تین انگلیوں کا اشارہ دیکھا جاسکتا ہے۔ تھائی لینڈ میں مظاہرین یہی تصویر استعمال کر رہے ہیں۔

دسمبر

EPA

کورونا وائرس سے شاید پوری دنیا متاثر ہو رہی ہے لیکن انسانوں کی خلا میں جانے کی دوڑ جاری ہے۔
چین اب دنیا کی تاریخ میں دوسرا ملک بن گیا ہے جس نے چاند پر اپنا جھنڈا لگایا ہے۔ 44 برسوں بعد چینی مشن چاند سے پتھروں کے نمونے لایا ہے۔

Leave a Reply