بھارت کے9 لاکھ فوجی کشمیریوں پر ستم ڈھا رہے ہیں، وزیراعظم

Loading...

وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ بھارت کے9 لاکھ عسکری اہلکار کشمیریوں پر ستم ڈھا رہے ہیں، گزشتہ روز قابض فوجیوں نے سری نگر میں 15 گھر نذر آتش کر دیئے تھے۔

وزیراعظم پاکستان عمران خان نے سوشل میڈیا پر جاری اپنے بیان میں کہا کہ سری نگر میں گزشتہ روز قابض بھارتی فوج نے 15 گھروں کو آگ لگا دی عمران خان کا کہنا تھا کہ 9 لاکھ بھارتی فوج کشمیریوں پر وحشیانہ ستم ڈھا رہی ہے، ہندوتوا نظریے والی مودی حکومت مقبوضہ کشمیر میں جنگی جرائم کی مرتکب ہو رہی ہے۔

مودی حکومت مقبوضہ وادی میں آبادی کا تناسب تبدیل کر رہی ہے جو جنیوا کنونشن کی خلاف ورزی ہے۔

اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر انہوں نے لکھا کہ میں دہرا رہا ہوں کہ مقبوضہ جموں و کشمیر میں جاری قتل ِعام سے دنیا کی توجہ ہٹانے کیلئے بھارت جعلی کارروائی (فالس فلیگ آپریشن) کرسکتا ہے۔

وزیر اعظم نے مزید کہا کہ گزشتہ روز قابض فوجیوں نے سری نگر میں 15 گھر نذرآتش کر دیئے تھے۔ ہندوتوا پر ایمان رکھنے والی قابض مودی سرکار چوتھے جنیوا کنونشن کی خلاف ورزی کرتے ہوئے آبادی کا تناسب بدلنے کیساتھ مقبوضہ کشمیر میں جنگی جرائم کی مرتکب ہے۔

اس سے قبل 17 مئی کو بھی وزیر اعظم عمران خان نے اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر مقبوضہ کشمیر میں بھارتی قابض فوج کی کارروائیوں سے متعلق پیغام جاری کیا تھا۔

Loading...

عید کے بعد ٹائیگر فورس کی ذمہ داریوں میں مزید اضافہ کر رہے ہیں، عثمان ڈار

عمران خان کا کہنا تھا کہ 9 لاکھ بھارتی فوج کشمیریوں پر وحشیانہ مظالم ڈھا رہی ہے، ہندوتوا نظریے والی مودی حکومت مقبوضہ کشمیر میں جنگی جرائم کی مرتکب ہو رہی ہے۔

وزیراعظم پاکستان نے ایک بار پھر دنیا کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں نسل کشی سے دنیا کی توجہ ہٹانا چاہتا ہے، بھارت توجہ ہٹانے کےلیے فالس فلیگ آپریشن کرے گا۔

دوسری جانب چیئرمین کشمیرکونسل یورپی یونین علی رضا سید نے کہا کہ بھارتی فورسز کا آپریشن کی آڑ میں مقبوضہ کشمیر میں 15 گھروں کو تباہ کرنا انتہائی قابل مذمت ہے۔

علی رضا سید کا کہنا تھا کہ بھارتی حکام نے کشمیری نوجوانوں کو ہتھیار اٹھانے پر مجبور کیا ہے، ہم بھارتی مظالم کے خلاف عالمی فورمز پرآواز بلند کریں گے۔

(Visited 23 times, 1 visits today)
loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں