کرونا وائرس سے صحتیاب ہونے والے کس بیماری کا شکار ہو سکتے ہیں .. ؟

Loading...

کرونا وائرس دنیا بھر میں ابھی بھی بہت تیزی سے پھیل رہا ہے اور دن بدن کرونا وائرس سے متاثر لوگوں  کی تعداد میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے اور لوگ صحتیاب بھی ہورہے ہیں.

دنیا بھر میں کرونا وائرس سے متاثر ہونے والے افراد کی تعداد 50 لاکھ سے زائد ہوگئی ہے اور 3 لاکھ 29 ہزار 782 افراد اس وائرس سے ہلاک ہوچکے ہیں. وائرس سے اب تک 19 لاکھ 59 ہزار سے زائد مریض صحتیاب ہو چکے ہیں۔

دنیا بھر میں ماہرین کرونا وائرس کی ویکسین بنانے کی بھرپور کوششیں کر رہے ہیں. دنیا بھر میں ماہرین کرونا وائرس کی ویکسین بنانے کی بھرپور کوششیں کر رہے ہیں .

برطانوی ماہرین نے اپنی ریسرچ سے یہ انکشاف کیا ہے کہ جو لوگ کرونا وائرس سے صحت یاب ہوتے ہیں وہ نفسیاتی مسائل کا شکار ہو سکتے ہیں . برطانوی ماہرین نے خبردار کیا ہے کہ کرونا وائرس سے نفسیاتی مریضوں کی شرح میں اضافہ ممکن ہے.

کرونا وائرس سے صحت یاب ہونے والے لوگ ایک لمبے عرصے تک نفسیاتی مسائل کا شکار ہو سکتے ہیں. ماہرین کے مطابق کرونا وائرس سے صحت یاب ہونے والوں میں سے ہر 3 مریضوں میں سے 1 مریض شدید ڈپریشن  یا اینگزائٹی میں مبتلا ہو سکتا ہے۔

Loading...

کرونا وائرس ختم ہو گا یا نہیں ..؟ نئی تحقیق سامنے آگئی..

ماہرین نے اس تحقیقی عمل میں سارس وائرس، مرس وائرس اور کرونا وائرس سے متاثر ہونے والے افراد کا جائزہ لیا، لیکن ماہرین نے اپنی زیادہ توجہ سارس اور مرس وائرس سے متاثر ہونے والے افراد پر رکھی ۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ ان دونوں گزشتہ وائرسز کی نسبت کرونا وائرس کے اثرات زیادہ منفی ہو سکتے ہیں کیونکہ کرونا وائرس ان دونوں وائرسز کی نسبت زیادہ تیزی سے پھیل رہا ہے.

ماہرین کا یہ بھی کہنا ہے کہ کرونا وائرس سے متاثرہ تمام افراد نفسیاتی مسائل کا شکار نہیں ہوں گے. لیکن تقریبا 15 فیصد لوگوں کو نفسیاتی مسائل کا سامنا ضرور کرنا پڑے گا جس سے وہ صحتیابی کے بعد بھی معمول کی زندگی کی طرف نہیں لوٹ سکیں گے۔

(Visited 63 times, 1 visits today)
Loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں