ایسا شہر جہاں کوئی نہیں رہتا.. لیکن کیوں …؟

 کسی غیرآباد عمارت کا خیال آئے تو ذہن میں کسی سنسان اور تباہ حال عمارت کا تصور ابھرتا ہے لیکن کینیڈا میں ایک پورا شہر ایسا ہے۔

جس میں خوبصورت گھر موجود ہیں لیکن ان میں کوئی ایک بھی مکین نہیں رہتا اور اس کے باوجود نہ صرف شہر بہتر حالت میں موجود ہے بلکہ اس کی بتیاں بھی ابھی تک جل رہی ہیں۔ویب سائٹ amusingplanet.com کے مطابق یہ شہر برٹش کولمبیا کے شمالی ساحل پر موجود ہے اور اس کا نام کٹسالٹ ہے۔ اس شہر میں قطار در قطار خوبصورت گھر، شاپنگ سنٹرز، ریسٹورنٹس، بینک، تھیٹرز، جدید ہسپتال، ڈاک خانہ اور دیگر ہر نوع کی عمارات موجود ہیں لیکن 1982ءکے بعد سے اب تک اس شہر کو کبھی کسی نے اپنا مسکن نہیں بنایا۔

رپورٹ کے مطابق یہ شہر کوئی آسیب زدہ نہیں ہے اور اس کی تاریخ بھی انتہائی مختصر ہے۔ دراصل یہ شہر 1979ءمیں بسایا گیا تھا جب اس علاقے میں مولیبڈینم ( molybdenum ) نامی دھات کی کانیں دریافت ہوئیں اور ان سے کان کنی کا آغاز ہوا۔ یہ شہر ان کانوں میں کام کرنے والے مزدوروں اور دیگر عملے کی رہائش کے لیے بنایا گیا۔ یہ دھات سٹیل کو سخت کرنے کے لیے استعمال کی جاتی ہے۔

بچے کی پیدائش کے بعد میاں بیوی کا جنسی تعلق کیسا ہوتا ہے؟

تاہم کچھ عرصہ بعد ہی مارکیٹ میں اس دھات کی قیمتیں کم ہونا شروع ہو گئی اور بالآخر نہ ہونے کے برابر رہ گئیں۔ اس کا نتیجہ یہ ہوا کہ ان کانوں سے دھات نکالنے کا کام بند کر دیا گیا۔ جس کے بعد اس شہر کے مکینوں نے بھی یہاں سے نقل مکانی شروع کر دی اور 1982ءمیں یہ شہر مکمل خالی ہو گیا۔اس کے بعد اب تک کوئی ایک شخص بھی یہاں آ کر مستقل رہائش پذیر نہیں ہوا۔

2005 میں ایک بھارتی نژاد امریکی کاروباری شخص کرشنن سوتھن تھیران نے یہ شہر 70لاکھ ڈالر میں خرید لیا اور اس کو ازسرنو بحال کیا۔ اب تک کرشنن اس شہر کی بحالی پر اڑھائی کروڑ ڈالر خرچ کر چکا ہے۔ اب اس شہر میں 12لوگوں کی ایک ٹیم رہتی ہے جسے کرشنن نے شہر کی دیکھ بھال پر مامور کر رکھا ہے۔

یہ لوگ گھروں، بازوروں کی صفائی کرتے ہیں اور سڑکوں پر لگے درختوں کا بھی خیال رکھتے ہیں۔کرشنن اس شہر کو ایل این جی انڈسٹری کامرکز بنانے کا ارادہ رکھتا ہے۔

(Visited 50 times, 1 visits today)

Comments

comments

شہر,

اپنا تبصرہ بھیجیں