عمر کے کس حصے میں لوگ سب سے زیادہ خوش ہوتے ہیں….؟

سائنسدانوں نے تحقیق کے ذریعے یہ بات جاننے کی کوشش کی گئی انسان اپنی عمر کے کس حصے میں سب سے زیادہ خوش رہتا ہے؟

 تحقیق میں سائنسدانوں نے اس سوال کا ایسا جواب دے دیا ہے کہ جواب سن کر آپ حیران  رہ جائیں گے

تحقیق سے سائنسدان اس نتیجے پر پہنچے کے انسان .اپنی عمر کے 82 سال میں سب سے زیادہ خوش رہتا ہے

میل آن لائن کے مطابق سائنسدانوں نے اس تحقیق کے نتائج میں بتایا ہے کہ انسان 82 سال کی عمر میں سب سے زیادہ خوش زندگی گزارتا ہے۔

سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ 82 سال کی عمر میں اگر انسان خوشی کا موازنہ اپنی پچھلی زندگی سے کرے تو وہ اس نتیجے پر پہنچتا ہے کہ انسان کی اصل زندگی 80 سال کی عمر کے بعد شروع ہوتی ہے ۔

ریسرچ سے سائنسدانوں نے یہ بھی بتایا ہے کہ انسان کی عمر جیسے جیسے زیادہ ہوتی جاتی ہے اس کے دماغ کی کام کرنے کی صلاحیتیں بھی بہتر ہوتی جاتی ہے .

ہیجڑا کیسے پیدا ہوتا ہے ؟

ڈینیئل لیویٹن نامی سائنسدان اور  اس کی ٹیم نے اس عام تاثر کو غلط قرار دے دیا کہ عمر بڑھنے کے ساتھ ساتھ انسان کی یادداشت کمزور ہو جاتی ہے اور اسے نئی چیزیں سیکھنے میں مشکل پیش آتی ہے۔

اگر بیوی شوہر سے زیادہ پیسہ کمائے تو کیا ہوتا ہے….؟

ڈینیئل لیویٹن کا کہنا ہے کہ ”زائد العمری میں انسان کی دماغی ہیئت اور کارکردگی بہتر سے بہتر ہوتی چلی جاتی ہے اور وہ پہلے کی نسبت زیادہ اچھے انداز میں سیکھنے کی صلاحیت حاصل کرتا چلا جاتا ہے۔

ہماری ریسرچ میں عمر رسیدگی کے ساتھ وابستہ کیے گئے دونوں تاثرات غلط ثابت ہوئے ہیں کہ بڑھاپے میں انسان کا دماغ کمزور ہو جاتا ہے اور انسان غمگین رہنے لگتا ہے۔ حقیقت اس کے بالکل برعکس ہے۔“

(Visited 148 times, 1 visits today)

Comments

comments

خوش,

اپنا تبصرہ بھیجیں