کراچی میں بدترین لوڈ شیڈنگ 30 ستمبر کے بعد بہتر ہونے کا امکان ہے

بدترین لوڈ شیڈنگ
Loading...

کراچی: گیس فیلڈ میں سالانہ مرمتی کام کی وجہ سے کے الیکٹرک کو دی جانے والی گیس کا پریشر 30 ستمبر کے بعد ہی بہتر ہوسکے گا جس کے باعث کراچی میں بدترین لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ اس ماہ کے آخر تک جاری رہنے کا امکان ہے۔

سوئی سدرن گیس کمپنی ذرائع کے مطابق سنجھورو اورزرگون گیس فیلڈ سالانہ مرمت کی وجہ سے بند ہیں جب کہ دیگر فیلڈ سے بھی گیس فراہمی کم ہوگئی ہے، گیس کی فراہمی 30 ستمبر کے بعد بہتر ہونے کاامکان ہے۔

Loading...

ذرائع نے بتایاکہ اس وقت بھی 125 کروڑ روپے کی نادہندہ کے الیکٹرک کو کراچی کی ضرورت کے مطابق 180 سے 200 ایم ایم سی ایف ڈی گیس دی جارہی ہے تاہم گیس پریشر کم ہے۔

میڈیا پر مولانا فضل الرحمان کے خلاف مہم چلائی جا رہی ہے، جمعیت علمائے اسلام

شہر میں لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ 12 سے 14 گھنٹے برقرار ہے اور صورتحال سے تنگ شہریوں کی جانب سے اب مختلف علاقوں میں احتجاج شروع کردیا گیا ہے۔

(Visited 16 times, 1 visits today)
Loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں