صرف نالوں کی صفائی کراچی میں مسئلے کا حل نہیں، مراد علی شاہ

Loading...

کراچی: وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ قدرتی آبی گزرگاہوں پر عمارتیں بن گئی ہیں، نالوں کے ساتھ تجاوزات ہیں، جس کے باعث بارش کا پانی نہیں نکلتا، صرف نالوں کی صفائی مسئلے کا حل نہیں، لوکل باڈیز کے پاس ایک باقائدہ مکینزم ہونا چاہیئے، جب 30 ایم ایم بارش ہو تو کیا ایس او پی ہوگی اگر 40 ایم ایم بارش ہوگی تو کیا ایس او پی ہوگی۔

نواز شریف کی نئی میڈیکل رپورٹ لاہور ہائیکورٹ میں جمع کرادی گئی

مراد علی شاہ کی زیر صدارت کراچی میں مون سون کی صورتحال کے حوالے سے اجلاس ہوا جس میں صوبائی وزراء سعید غنی، ناصر شاہ، کمشنر کراچی، ایم ڈی واٹر بورڈ سمیت متعلقہ حکام شریک ہوئے۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ کراچی میں صرف نالوں کی صفائی مسئلے کا حل نہیں۔

Loading...

وزیر بلدیات ناصر شاہ نے کہا کہ بارش کے دوران میں سڑکوں پر تھا، اہم سڑکوں سے بارش کے رکتے ہی پانی کی نکاسی کردی گئی، کچھ جگہوں پر نالے چوک ہوئے جس سے کچھ مسائل ہوئے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے ہدایت کی کہ شہر میں جن سڑکوں اور نالوں کے ڈیزائن درست نہیں انکو ٹھیک کریں، مجھے ان علاقوں کا تفصیلی پلان چاہئے جہاں گھروں میں پانی گیا ہے، مجھے شہر کی تمام 28 سب ڈویژنز کا پلان دیں، میں ہر سب ڈویژن پر وزیر یا مشیر کی ڈیوٹی لگاؤں گا، مجھے واٹر بورڈ، ایس ایس ڈبلیو ایم اے، کے ایم سی اور ڈی ایم سیز کے بہترین انجنیئرز کی مشاورت سے پلان چاہیے۔

(Visited 18 times, 1 visits today)
loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں