کچھ لوگوں کو ناخن چبانے کی عادت کیوں ہوتی ہے…..؟

آپ نے اکثر لوگوں کو دیکھا ہوگا کہ وہ اپنے ناخن چباتے رہتے ہیں اور ہزار کوششوں کے بعد بھی وہ اپنی اس عادت کو نہیں چھوڑ سکتے۔ لیکن ماہرین کا کہنا ہے کہ ایک خاص تدبیر کے تحت آپ اس کیفیت سے جان چھڑا سکتے ہیں۔

ماہرین نفسیات نے بتایا ہے کہ یہ عادت بچپن سے شروع ہوتی ہے اور عمر بھر جاری رہ سکتی ہے۔ نفسیات کی زبان میں اسے اونیکوفجیا کہتے ہیں۔

اس عادت کے منفی اثرات بہت زیادہ ہیں حتی کہ آپ کو اس سے کوئی خطرناک بیماری بھی ہوسکتی ہے۔ ماہرین نفسیات کا کہنا ہے کہ یہ بات جاننا بہت ضروری ہے کہ لوگ آخر ناخن کیوں چباتے ہیں۔ ماہرین نے نفسیاتی اور طبی بنیادوں پر اس کی وجوہات بیان کی ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ اکثر لوگ ٹینشن اور بے چینی کی صورت میں ناخن چبانے سے سکون محسوس کرتے ہیں اور بعض اوقات ان کی یہ عادت سے کچھ دماغی امراض جیسے کہ اے ڈی ایچ ڈی، او سی ڈی، گھبراہٹ اور بےچینی ظاہر ہوتی ہے۔

آپ کا بچہ کھانے سے کیوں بھاگتا ہے ….؟

لوگوں کے لیے یہ بات جاننا بہت ضروری ہے کی اس عادت سے جان چھڑانا کس حد تک ضروری ہے۔ کیونکہ اس کی وجہ یہ ہے کہ ناخن چبانے کے عمل سے انسان کے ٹشو شدید متاثر ہوتے ہیں۔

اس کے علاوہ ناخن چبانے سے آپ کے ناخن بہت چھوٹے ہوجاتے ہیں جس کی وجہ سے انگلیوں کے جراثیم اور بیکٹیریا آسانی سے منہ کے اندر داخل ہوتے ہیں یہاں تک کہ ناخنوں میں فنگس لگنے کا خطرہ بھی ہوتا ہے اور اگر ناخن کا کوئی حصہ انسان کے معدے میں چلا جائے تو یہ آنتوں کے انفیکشن کا بنتا ہے اس لیے لوگوں کو چاہیے کہ کہ وہ اپنی اس عادت سے جان چھڑائیں۔

ناخنوں کو چھوٹا رکھیں

اس عادت سے جان چھڑانے کا ایک طریقہ یہ بھی ہے کہ آپ اپنے ناخنوں کو کاٹتے رہیں

خواتین نیل پالش کا استعمال کریں

ماہرین کا مشورہ ہے کہ جن خواتین کو ناخن چبانے کی عادت ہے وہ اپنے ناخنوں پر نیل پالش لگائیں کیونکہ جب وہ ناخن چبائیں گی تو آپ کو نیل پالش کا ذائقہ برا لگے گا جس کی وجہ سے آپ کو اپنی عادت سے جان چھڑانے میں مدد ملے گی۔

اپنا جائزہ لیں

ماہرین نفسیات کا کہنا ہے کہ ناخن چبانے والے لوگ یہ ضرور سوچیں کہ آپ کیوں ناخن چبا رہے ہیں۔ آخر کیا وجہ ہےجس کی وجہ سے آپ یہ عادت نہیں چھوڑ سکتے ہیں۔

Leave a Reply