May 9, 2021

آج کل

Daily Aajkal News site

متحدہ عرب امارات کی 200 سال پرانی مسجد، خوبصورتی کی مثال

یہ مسجد ایک تعمیراتی شاہکار ہے جو بحیرہ عرب کے قریب ایک پہاڑی پر واقع ہے۔

متحدہ عرب امارات کی اس مسجد میں نماز پڑھنے  کیساتھ ساتھ آپ کو یہاں دو صدیوں سے زیادہ کی تاریخ بھی دیکھنے کو ملے گی۔

200 سال سے زیادہ پرانی محمد بن قاسم القاسمی مسجد راس الخیمہ کے علاقے میں واقع ہے جو یہاں کی قدیم عبادت گاہوں میں سے ایک ہے۔

اس مسجد کو شیخ سقر بن راشد القاسم کے دور میں تعمیر کیا گیا ، جس نے 1777 سے لیکر 1803 کے متحدہ عرب امارات پر حکومت کی ، یہ مسجد اس دور کی تعمیرات کا بہترین شاہکار ہے۔

اس مسجد میں روزانہ پنجگانہ نماز کیساتھ ساتھ نماز جمعہ بھی ادا ہوتی ہے، اور نمازی کثیر تعداد میں مسجد آتے ہیں۔

جب مسجد میں داخل ہوتے ہیں تو ایسا لگتا ہے کہ آثار قدیمہ کو کیسے محفوظ کیا گیا ہے۔

اس مسجد پر پلاسٹر ، مرجان پتھروں اور ساحل سمندر کے پتھروں کے ساتھ بہترین کاریگری دیکھائی گئی ہے۔

اس مسجد میں تقریبا ایک ہزار نمازی ایک وقت میں نماز ادا کر سکتے ہیں، 60 کالموں کے ساتھ ، اس کی چھت کھجور کے درختوں اور ایک چھتری سے ڈھکی ہوئی ہے۔

اس مسجد کے دونوں اطراف میں 31 محراب والی کھڑکیاں ہیں ، ایک راہداری ہے جس میں پہاڑ کے پتھر شامل ہیں اور مشرقی سائٹ پر لکڑی کے تین بڑے دروازے ہیں۔