آج کل

شیشہ کیسے تیار کیا جاتا ہے؟ جانئیے۔۔۔۔

جب آپ نے سجنا سنورنا ہوتا ہے تو شیشے کے سامنے آ کھڑے ہوتے ہوتے ہیں لیکن کبھی آپ نے سوچا یا جاننے کی کوشش کی کہ شیشہ کیسے بنتا ہے؟ اونچی عمارتوں پر لگے رنگ برنگے شیشے آنکھوں کو بہت بھاتے ہیں۔
آئیے ہم آپ کو بتاتے ہیں کہ شیشہ بنانے کیلئے کون کون سے طریقے استعمال کیئے جاتے ہیں۔

شیشہ بنانے کیلئے سب سے پہلے صنعتی شیشے کے پودے میں ریت کو بھٹی میں گرم کرنے سے پہلے بیکار شیشوں کے ٹکڑوں کو جمع کیا جاتا ہے اور اس میں کیلشیم کاربونیٹ، چونا پتھر (سوڈیم کاربونیٹ) کو سوڈا ایش کیساتھ ملایا جاتا ہے۔ سوڈا ایش صرف اس مقصد کیلئے استعمال کیا جاتا ہے کہ مینوفیکچرنگ کے عمل میں توانائی کو بچایا جا سکے۔

شیشے بیت سی قسموں کے ہوتے ہیں جنہیں بنانے کیلئے طریقہ کار بھی مختلف ہے، تجارتی گلاس کو مینوفیکچر کرنے کیلئےمختلف طریقہ استعمال کیا جاتا ہے
۔ یہ تبدیلی اکثر دوسرے کیمیکل شامل کرنے کی صورت میں سامنے آتی ہے مثال کے طور پر ، کرومیم یا آئرن پر مبنی کیمیکل پگھلی ہوئی ریت کے مرکب میں شامل کرکے گرین ٹنٹڈ گلاس بناتے ہیں ، جبکہ کوبالٹ نمک میں ملا کر نیلے رنگ کا شیشہ پیدا ہوتا ہے۔ تندور پروف گلاس بنانے کے لئے ، بورن آکسائڈ پر5گھلے ہوئے مرکب میں شامل کیا جاتا ہے۔ عمدہ کرسٹل گلاس بنانے کے لئے لیڈ آکسائڈ شامل کیا جاتا ہے جسے ضرورت کے وقت زیادہ آسانی سے کاٹا جاسکتا ہے۔

شیشے کی کچھ انتہائی ماہر اور انتہائی مضبوط قسمیں ، جیسے بلٹ پروف گلاس مختلف مینوفیکچرنگ عمل کے ذریعے بنائے جاتے ہیں۔ گلاس اور پلاسٹک کی ایک سے زیادہ پرتوں کو سینڈویچنگ کر کے بلٹ پروف گلاس بنانے کے لئے استعمال کیا جاتا ہے۔ کار ونڈشیلڈز اور آٹوموبائل میں استعمال ہونے والے سخت شیشے کو عام طور پر پگھلا ہوا شیشے کو بہت تیزی سے ٹھنڈا کرکے بنایا جاتا ہے تاکہ اسے زیادہ سخت بنایا جاسکے۔

بلب اور کشتیوں کے فائبر گلاس ہولس ، سینڈ پیپر (جسے گلاس پیپر بھی کہا جاتا ہے) تک مل جاتے ہیں ، جو ہم سجاوٹ کے لئے استعمال کرتے ہیں۔ گلاس واضح ، صاف ، سستا ، ناقابل عمل اور مضبوط ہو،اور کیا چاہئیے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *