بلاول بھٹو کا وزیراعظم کے خلاف تحریک عدم اعتماد لانے کا اعلان

Loading...

پاکستان پیپلزپارٹی (پی پی پی) کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کو حکمت عملی تبدیل کرنے کا مشورہ دیا ہے۔

براڈشیٹ سکینڈل: پی پی اور ن لیگ کی جسٹس (ر) عظمت سعید کی تقرری کی مخالفت

بلاول بھٹو زرداری نے وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کے ہمراہ ائیرپورٹ روڈ پر انڈسٹریل اسٹیٹ منصوبے کا افتتاح کیا۔

اس موقع پر تقریب سے خطاب میں پی پی چیئرمین نے حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا اور اپنے اتحادیوں کو حکمت عملی بدلنے کا بھی مشورہ دیا۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی نے ہمیشہ مزدور، کسان اور عوام کی خدمت کی، روزگار اور معیشت میں بہتری کے مواقع فراہم کیے اور اب سندھ میں انڈسٹریل اور اکنامکس زون کے قیام سے نہ صرف مقامی صنعت کو ترقی ملے گی بلکہ عوام کیلئے روزگار کے نئے مواقع بھی پیدا ہوں گے۔

حکومت گرانے کیلئے بلاول نے اپوزیشن اتحاد کو مشورہ  بھی دیا اور کہا کہ اتحادیوں کو منائيں گے کہ حکومت کو گھر بھیجنے کیلئے  جمہوری و آئینی طریقہ تحریک عدم اعتماد ہے۔

Loading...

ان کا کہنا تھا کہ جب اپنی حکمت عملی پر اتحادیوں کو منالیں گے تو ہماری چائے کی دعوت سے بھی حکومت اتنا گھبرا جائے گی جتنا 10، 10 جلسوں سے نہیں گھبراتی۔

انہوں نے کہا کہ کٹھ پتلی، نالائق اور نااہل وزیر اعظم کو گھر بھیجنے کا طریقہ تحریک عدم اعتماد ہے۔

پی پی چیئرمین کا کہنا تھا کہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ اس نااہل، ناجائز اور سلیکٹڈ حکومت کو گھر بھیج کر ایک ایسی حکومت قائم کرنا چاہتی ہے جو عوام کی حقیقی معنوں میں ترجمانی کرے۔

(Visited 11 times, 1 visits today)
Loading...

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں